Category : غزل

غزل

غزل

قندیل
احمدعطاء اللہ ہجر کو وصل کے برابر مان جو میسر ہے اس کو بہتر مان حسن کی حاضری بنا ممکن عشق حاضر ہے اس کو...
غزل

غزل

قندیل
ادریس آزاد کردیا ہے جُدا کسی سے مجھے اتنا شکوہ ہے شاعری سے مجھے پہلے تم تھے تو یہ بھی پیاری تھی اب تو نفرت...
غزل

غزل

قندیل
حمادخان اپنے سینے میں عبادت کا شغف دیکھتا ہوں میں کھڑا دور سے مسجد کی طرف دیکھتا ہوں دور سے کعبہ مدینہ و نجف دیکھتا...
غزل

غزل

قندیل
(فلسطین کےحالات سے متاثر ہوکر) ڈاکٹرحنیف ترین آج غزہ خؤن کا تالاب ہے پورا عالم پھر بھی محو خواب ہے بند پنجرے میں فلسطینی زمین...
غزل

غزل

قندیل
احمدعطاء اللہ ساری دنیا قبول صورت ہے ایک بس تو ہی خوب صورت ہے پاس رکھو سفید بازو کو اب مجھے جاگنے کی عادت ہے...
غزل

غزل

قندیل
عمیرنجمی ضرر رساں ہوں بہت، آشنا ہوں میں خود سے تبھی تو فاصلہ رکھ کر کھڑا ہوں میں خود سے سلام! کون؟ کہیں مل چکے...
غزل

غزل

قندیل
احمدعطاء اللہ خیر اب لوٹنا محال سمجھ خود کو اس دل کا یرغمال سمجھ میں مکمل توجہ چاہتا ہوں عشق پھولوں کی دیکھ بھال سمجھ...
غزل

غزل

قندیل
مقصودوفا آنسوؤں کی ہنسی اُڑا تے رہے درد آنکھوں میں مسکراتے رہے ہجر اتنی بڑی بلا بھی نہیں ہم کوئی گیت گنگناتے رہے پیڑ خاموشیوں...
غزل

غزل

قندیل
احمدحماد جب بھی آتا ہوں ترے ساتھ لڑائی کر کے ڈسنے لگتےہیں ندامت کے سیہ ناگ مزید تُو مِرے جذبِ ملاقات کی تضحیک نہ کر...
غزل

غزل

قندیل
احمدعطاء اللہ عشق کا آخری چراغ ہوں میں حسن سے بڑھ کے بد دماغ ہوں میں کوئی مجنوں ہوا تھا سنتا ہوں اب یہاں عشق...
غزل

غزل

قندیل
احمدعطاء اللہ عطا مثال بھی خود کو بنانا پڑتا ہے ہمیں تو عشق بھی کرکے دکھانا پڑتا ہے ہمارے تیرتے بوسے گلی میں گرتے ہیں...
غزل

غزل

قندیل
ڈاکٹر شاذیہ عمیر (اسسٹنٹ پروفیسر شعبۂ اردو، دہلی یونیورسٹی،دہلی) موبائل: 9650618651 drshaziaomair@gmail.com جنسِ بازار میں انسان ہی سستا کیوں ہے؟ یہ مرے دل کا لہو...
غزل

غزل

قندیل
علی زریون پرائی نیند میں سونے کا تجربہ کر کے ! میں خوش نہیں ہوں تجھے خود میں مبتلا کر کے ! یہ کیوں کہا...
غزل

غزل

قندیل
شازیہ خان شازی کس طرح ہو گا طے بتا سائیں یہ زمانوں کا فاصلہ سائیں کیوں مجھے مشکلوں سے ملتا ہے؟ آدمی ہے یا وہ...
غزل

غزل

قندیل
احمدعطاء اللہ موت سے روکنے آسکتا ہوں میں تجھے دیکھنے آسکتا ہوں جان لیوا ہی سہی رات کی سیر باغ میں گھومنے آسکتا ہوں تیری...
غزل

غزل

قندیل
احمدعطاء اللہ اتنا آسان کر محبت کو روح کے ساتھ جسم مل پائیں چبھ رہا ہے یہ کھردرا ملبوس یہ ہٹے ، ریشمی سا دل...
غزل

غزل

قندیل
احمدعطاء اللہ تو دل میں ہے مگر طاری نہیں ہے تعلق میں وہ سرشاری نہیں ہے تمہارے آئینے کو چپ کراتا مگر اس بھی اب...
غزل

غزل

قندیل
احمدعطاء اللہ آپ کے سرخ اشاروں پہ یہ ٹھہرے ہوئے لوگ عشق کو روگ بنا بیٹھے ہیں سہمے ہوئے لوگ اپنے در بند ہی رکھو...
غزل

غزل

قندیل
احمدعطاء اللہ ایک پتھر پہ پیار آنے لگا اور پھر بار بار آنے لگا ایک دن میں نے پیش دستی کی پھر پلٹ کر بھی...
غزل

غزل

قندیل
ابھشیک شکلا غبارِقریۂ امید بھی نہیں ہوتی وہ آنکھ جس کو تری دید بھی نہیں ہوتی یہ لوگ روح پہ نازاں تو ہیں مگر ان...
غزل

غزل

قندیل
مقدس ملک کیسے ممکن ہے کہ انساں کو بھلا سکتا ہے رزق پتھر میں جو کیڑے کو کھلا سکتا ہے ایک جلتے ہوئے منظر نے...
غزل

غزل

قندیل
احمدعطاء اللہ ان کو تو میری آنکھیں عطیہ کر جن کا دعوی ہے تو حسیں نہیں ہے ایک محفل تو ہے ستاروں بھری ہاں مگر...
غزل

غزل

قندیل
نصیراحمدناصر چھجے ہیں، سائبان ہیں آگے بڑھے ہوئے گلیوں کے سب مکان ہیںآگےبڑھےہوئے پس ماندگی عوام کے پیچھے پڑی ہوئی دو چار خاندان ہیں آگے...
غزل

غزل

قندیل
دھروگپت(ریٹائرڈ آئی پی ایس) اک بھٹکتی صداسارہتاہوں آج کل بے پتاسارہتاہوں گھرمرے دل میں بھی رہانہ کبھی گھرمیں میں بھی ذراسارہتاہوں چاندسے روز آنکھ لڑتی...
غزل

غزل

قندیل
سعودعثمانی میں راکھ تو ہوگیا تھا شاید پھر بھی کہیں کچھ بچا پڑا تھا اک شعلۂ خوش بدن کا پرتَو مجھ پر بھی ذرا ذرا...
غزل

غزل

قندیل
سعودعثمانی چشمِ بے خواب پہ خوابوں کا اثر لگتا ہے کیسا پت جھڑ ہے کہ شاخوں پہ ثمر لگتا ہے نیند اب چشمِ گراں بار...
غزل

غزل

قندیل
عمیرنجمی نکلتے جائیں بدن سے، اسے جگہ دیے جائیں وہ چاہتا ہے کہ بس وہ ہو، ہم مٹا دیے جائیں کسی کی نیند ہمیں دستیاب...
غزل

غزل

قندیل
رحمان فارس جہان بھر میں کسی چیز کو دوام ہے کیا ؟ اگر نہیں ہے تو سب کچھ خیالِ خام ہے کیا ؟ اُداسیاں چلی...
غزل

غزل

قندیل
ڈاکٹرمشتاق احمد، دربھنگہ ہیں لہو کے نشاں تو بہ تو بہ صنم یوں نہ لے امتحاں تو بہ تو بہ صنم پاس بھی آپ آ...