312

دارالعلوم وقف دیوبندکے استاذ حدیث مولانا غلام نبی کشمیری کا انتقال


نئی دہلی:دارالعلوم وقف دیوبند کے سینئر استاذاور ماہنامہ ندائے دارالعلوم کے ایڈیٹرمولانا غلام نبی کشمیری کا آج صبح ساڑھے چھ بجے دہلی کے ایک ہسپتال میں انتقال ہوگیا۔مرحوم گزشتہ کافی عرصے سے بیمار تھے اور زیرعلاج تھے۔واضح رہے کہ مولانا مرحوم دارالعلوم دیوبند کے ایک ممتاز فاضل اور وقف دارالعلوم کے جید اساتذہ میں شمار ہوتے تھے۔انہیں درس و تدریس کے علاوہ خطابت و تحریر پر بھی یکساں عبور حاصل تھاچنانچہ جہاں چار دہائی سے زائد دارالعلوم وقف میں تدریسی خدمات انجا م دیں وہیں اس ادارے سے شائع ہونے والے ماہانہ مجلہ کی ادارت بھی کرتے رہے،اس کے علاوہ انہوں نے متعدد کتابیں بھی تصنیف کیں جن میں ایک بارہ مہینوں کے فضائل و خصوصیات پر مشتمل تقاریر کا مجموعہ اور عربی شعر و ادب کی مشہور کتاب دیوان متنبی کی شرح قابل ذکر ہیں۔انہوں نے ندائے دارالعلوم میں بانی دارالعلوم دیوبند مولانا محمد قاسم نانوتوی کی تصانیف کی تسہیل و توضیح کا بھی اچھا سلسلہ شروع کیاتھااوران کی مشہور کتاب’’تقریردلپذیر‘‘کی روشنی میں مولاناکے افکار و علوم کی تشریح کررہے تھے،جس کی اب تک۴۷قسطیں شائع ہوچکی ہیں۔مولاناخالص علمی آدمی تھے،شستہ و شگفتہ اخلاق کے حامل تھے،طلبہ و علمامیں انھیں یکساں مقبولیت حاصل تھی۔درمیان میں کچھ عرصہ انہوں نے دیوبند کے ایک دوسرے ادارے دارالعلوم زکریامیں بھی تدریسی خدمت انجام دی تھی اور جب سے طبیعت زیادہ علیل ہوئی تھی تو کشمیر کے مدرسہ ضیاء العلوم میں تدریس حدیث کی خدمت انجام دے رہے تھے۔مرحوم کی نماز جنازہ آج بعد نمازعشادارالعلوم دیوبند کے احاطۂ مولسری میں اداکی جائے گی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں