121

اعتکاف

ڈاکٹر سید افضل حسین قاسمی

گوشہء مسجد میں بیٹھو بس یہی ہے اعتکاف
پھر گناہوں کا کرو اپنی زباں سے اعتراف

آخری دس دن مبارک ماہ کے لے لیجئے
بیس کی مغرب سے مسجد میں بسیرا کیجئے

کھانا پینا اور سونا بس اسی مسجد میں ہو
جو ہیں احکامِ رسول پاک بس ان پر چلو

اہلِ مسجد یا محلے والے کھانا بھیج دیں
پھر نہیں لازم کہ اہلِ خانہ بھی روٹی گڑھیں

گر نہیں کھانے کاکوئی نظم مسجد میں تو جان
اپنےگھر سے لاکےکھاناکھانے کی تُودل میں ٹھان

خارجِ مسجد نہیں جانا ضروت کے سوا
داخلِ مسجد ہی رہ جانا کہ جیسے ہو گدا

امردوں کے واسطے زیبا نہیں ہے اعتکاف
باعثِ فتنہ ہے یہ ، کر دیجئے مجھ کو مُعاف

عورتیں مسجدنہ جائیں گھرمیں بیٹھیں چین سے
ان کے جانے سے ہے فتنہ، منہ سے ہو یا نین سے

وقت مسجد میں گزاریں حمد اور تسبیح میں
گر نہ ہو بجلی تو بیٹھیں پیشِ کھڑکی ریح میں

وقت گزرے آپ کا پڑھتے کلام اللہ کو
اپنا گھر سمجھیں نہ ہرگز آپ بیت اللہ کو

تھی اگر منت تو پھر واجب ہوا یہ اعتکاف
ویسے ہے فرضِ کفایہ بات بالکل صاف صاف

دیکھتے ہی چاند آجانا ہے مسجد سے بروں
ورنہ رہ جانا ہے مسجد میں، نہیں جانا کہوں

قاسمی کو یاد رکھ لیجیے دعاؤں میں جناب
معتکف احباب ، عالی مرتبت عزت مآب

…………………………………………………………….
ڈاکٹر قاسمی.
نورنگ دوا خانہ ،بنگلور.
9448344458 ،7090026003 ،08025478397

کیٹاگری میں : نظم

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں